Ticker

Header Ads Widget

PUBG Mobile Team Focusing on Re-Launching the Game in India, Publisher Krafton Says: Report



PUBG Mobile Team that specialize in Re-Launching the sport in India PUBG Mobile India was meant to be a rested version of the sport with changes that higher suit the Indian audience. PUBG Mobile India cluster is zeroing in on transfer the Indian rendition of the sport to the country, a delegate of the game's distributor Krafton has apparently aforesaid. As per the report, Krafton has to boot aforesaid that since it's doing everything to set up for the dispatch of AN Indian adaptation of PUBG, it's chosen to not open pre-enlistments for PUBG: New State in The new game was as recently declared in numerous business sectors and is up for pre-enrollment on Google Play and therefore the App Store for humanoid and iOS gadgets, As indicated by a report by Sportskeeda, a Krafton delegate aforesaid, "With Krafton doing all that it will to set up for the dispatch of another PUBG application expressly created and adjusted for India, it's chosen to not incorporate pre-enrollment for PUBG: New State in India". in sight of this, apparently, the concentration for the organization is to hold PUBG Mobile India to the country and Kraftron is by all accounts in chats with the Indian government to aim to try to to specifically that. PUBG Mobile was prohibited in India in September a year agone owing to its relationship with Chinese organization Tencent and there are a couple of endeavors from that time forward to bring it back. once the boycott, PUBG Mobile's distributing and conveyance rights were confiscate by Krafton, a Korean organization. Krafton has been trying to require PUBG Mobile back to India and but, it's soon aiming to deliver another rendition of the sport known as PUBG: New State that is not accessible for pre-enrollment in India, its center is yet carrying PUBG Mobile India to the country. within the meanwhile, another assertion from a Krafton correspondences chief as elaborated by Sportskeeda says that the distributer is hanging tight for the general public authority's alternative on their arrangement for PUBG in India. "We ar anticipating for Indian government's thought and selection on our next arrangement with PUBG within the locus," the report cited a Krafton correspondences agent as expression. whereas this does not really offer any affirmation on what the destiny of the sport would be, PUBG Mobile fans will have some comfort in realizing that the designers and distributors ar running once re-dispatching the sport in India. The Sportskeeda report likewise shared what Sean Hyunil Sohn, Head of company Development at Krafton, required to mention concerning PUBG Mobile's rebound at India gambling Conference "I cannot tell the circumstance or something since we do not have the foggiest plan however. In any case, what I will advise you is, we tend to care concerning the Indian market very, and what is more, that's the means that by that I become a lot of accustomed to you and become accustomed to companions within the Indian gambling trade currently. therefore actually, we are going to build a solid effort to urge it going," Sohn allegedly aforesaid.

پب جی موبائل ٹیم بھارت میں گیم کو دوبارہ لانچ کرنے پر توجہ دے رہی ہے


پب جی موبائل ٹیم جو بھارت میں کھیل کو دوبارہ لانچ کرنے میں مہارت حاصل کرتی ہے PUBG موبائل انڈیا کا مقصد ہندوستانی سامعین کے لئے زیادہ تبدیلیوں کے ساتھ کھیل کا آرام شدہ ورژن ہونا تھا۔ کھیل کے ڈسٹری بیوٹر کرافٹن کے ایک مندوب نے بظاہر اس سے پہلے کہا ہے کہ پبی جی موبائل انڈیا کلسٹر کھیل کی ہندوستانی پیشکش کو ملک منتقل کرنے پر صفر ہو رہا ہے۔ رپورٹ کے مطابق کرافٹن کو مذکورہ بالا بوٹ کرنا ہوگا کہ چونکہ یہ PUBG کی ایک ہندوستانی موافقت کے لئے قائم کرنے کے لئے سب کچھ کر رہا ہے, PUBG کے لئے پری بھرتی نہیں کھولنے کا انتخاب کیا گیا ہے: نئے کھیل میں نئی ریاست حال ہی میں بے شمار کاروباری شعبوں میں اعلان کیا گیا تھا اور گوگل پلے پر پری انرولمنٹ کے لئے ہے اور اسی وجہ سے ایپ سٹور برائے ہیومینوڈ اور آئی او ایس گیجٹ جیسا کہ اسپورٹسکیدا کی ایک رپورٹ سے ظاہر ہوتا ہے، ایک کرافٹن مندوب نے مذکورہ بالا کہا تھا، "کرافٹن کے ساتھ وہ سب کچھ کر رہا ہے جو وہ بھارت کے لئے اظہار کے طور پر بنائی اور ایڈجسٹ کی گئی ایک اور PUBG ایپلی کیشن کے ڈسپیچ کے لئے قائم کرے گا، اس کا انتخاب کیا گیا ہے کہ پب جی: ہندوستان میں نئی ریاست کے لئے پری انرولمنٹ شامل نہ کیا جائے"۔ بظاہر اس تنظیم کے لئے ارتکاز ملک میں PUBG موبائل انڈیا کا قبضہ ہے اور کرافٹرون ہندوستانی حکومت کے ساتھ چیٹ میں تمام کھاتوں کے ذریعہ ہے جس کا مقصد خاص طور پر اس کی کوشش کرنا ہے۔ چین کی تنظیم ٹینسینٹ کے ساتھ تعلقات کی وجہ سے ستمبر میں ہندوستان میں PUBG موبائل ممنوع تھا اور اسے واپس لانے کے لئے اس وقت سے ایک دو کوشش یں ہیں۔ بائیکاٹ کے بعد ایک کوریائی تنظیم کرافٹن کی جانب سے PUBG موبائل کی تقسیم اور کنویج کے حقوق ضبط کر لیے گئے۔ کرافٹن ہندوستان واپس PUBG موبائل کی ضرورت کرنے کی کوشش کر رہا ہے اور لیکن، جلد ہی اس کا مقصد پبی جی کے نام سے مشہور کھیل کی ایک اور پیشکش فراہم کرنا ہے: نئی ریاست جو ہندوستان میں پہلے سے اندراج کے لئے قابل رسائی نہیں ہے، اس کا مرکز ابھی تک PUBG موبائل انڈیا کو ملک لے جا رہا ہے۔ اس دوران کرافٹن خط و کتابت کے سربراہ کی جانب سے ایک اور دعویٰ جس کی تفصیل اسپورٹسکیڈا نے بیان کی ہے، کہا گیا ہے کہ تقسیم کنندہ ہندوستان میں PUBG کے لئے اپنے انتظام پر عام عوامی اتھارٹی کے متبادل کے لئے تنگ لٹک رہا ہے۔ رپورٹ میں کرافٹن خط و کتابت کے ایک ایجنٹ کو اظہار خیال کے طور پر پیش کیا گیا ہے کہ ہم ٹڈی کے اندر PUBG کے ساتھ اپنے اگلے انتظام پر ہندوستانی حکومت کی سوچ اور انتخاب کا امید کر رہے ہیں۔ اگرچہ یہ واقعی اس بات کا کوئی اقرار پیش نہیں کرتا کہ کھیل کی تقدیر کیا ہوگی، PUBG موبائل شائقین کو یہ سمجھ کر کچھ سکون ملے گا کہ ڈیزائنرز اور ڈسٹری بیوٹرز آر ایک بڈیولپمنٹ کے سربراہ شان ہیونل سوہن کو انڈیا جوئے کانفرنس میں PUBG موبائل کی باز گشت سے متعلق ذکر کرنا ضروری تھا "میں حالات یا کار ہندوستان میں کھیل کو دوبارہ بھیجنے کے بعد دوڑ رہے ہیں۔ اسپورٹسکیدا کی رپورٹ میں اسی طرح شیئر کیا گیا ہے جو کرافٹن میں کمپنی چھ نہیں بتا سکتا کیونکہ ہمارے پاس تاہم سب سے زیادہ دھندلا منصوبہ نہیں ہے۔ وہ یہ ہے کہ ہم ہندوستانی بازار کے بارے میں بہت خیال رکھتے ہیں اور اس سے زیادہ یہی مطلب ہے کہ اس سے میں آپ کا بہت عادی ہو جاتا ہوں اور اس وقت ہندوستانی جوئے کی تجارت کے اندر ساتھیوں کا عادی ہو جاتا ہوں۔ اس لیے دراصل ہم اس کے جانے پر زور دینے کے لیے ایک ٹھوس کوشش کریں گے۔

Post a Comment

0 Comments